کابل

ایران کے قائم مقام وزیر خارجہ علی باقری کنی کی افغانستان کے وزیر خارجہ مولوی امیر خان متقی سے ٹیلیفونک رابطہ

ایران کے قائم مقام وزیر خارجہ علی باقری کنی کی افغانستان کے وزیر خارجہ مولوی امیر خان متقی سے ٹیلیفونک رابطہ

 

کابل (الامارہ ) ایران کے قائم مقام وزیر خارجہ علی باقری کنی نے ایران کے مرحوم صدر اور وزیر خارجہ کی نماز جنازہ میں امارت اسلامیہ کے وفد کی شرکت پر شکریہ ادا کیا اور اس شرکت کو دونوں پڑوسی ممالک اور اقوام کے درمیان اچھے اور تعمیری تعلقات کا مظہر قرار دیا۔

علی باقری کنی نے غزہ کے حوالے سے دونوں ممالک کے مشترکہ مؤقف کو سراہتے ہوئے امید ظاہر کی کہ عالم اسلام کے دیگر ممالک بھی غزہ کی مظلومیت پر آواز اٹھائیں گے۔ افغانستان کے وزیر خارجہ نے کہا کہ ہم تمام ہمسایہ ممالک کے ساتھ خوشی اور غم میں برابر کے شریک ہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ خوشی کی بات ہے کہ گزشتہ تین سالوں میں امارت اسلامیہ نے ایران کے ساتھ اقتصادی اور سیاسی میدانوں میں بہترین پیش رفت حاصل کی ہے، اس تعاون اور ہم آہنگی کو مزید مضبوط کرنے کی ضرورت ہے ہم تمام شعبوں میں اچھی پیش رفت کا مشاہدہ کر رہے ہیں۔

مولوی امیر خان متقی نے مزید کہا کہ افغانستان ایک آزاد اور خود مختار ملک ہے اور اس کے معاملات میں مداخلت کسی کے مفاد میں نہیں۔

ٹیلیفونک رابطے کے دوران دونوں فریقین نے سیاسی اور اقتصادی شعبوں میں مزید تعاون اور ہم آہنگی کے عہد کا اعادہ کیا۔